بلخ میں باہر سے واپس آنے والے باغیوں کے شمالی زون کا مسئول دو ساتھیوں سمیت مارا گیا۔

المرصاد کو سکیورٹی ذرائع سے خبر ملی ہے کہ گزشتہ شب صوبہ بلخ کے ضلع خاص بلخ میں سکیورٹی فورسز کی کاروائی میں باغیوں کے ایک گروپ کے شمالی زون کا مسئول اپنے دو ساتھیوں سمیت مارا گیا۔

ذرائع کے مطابق یہ جھڑپ ضلع خاص بلخ کے علاقے چہار سرکہ میں اس وقت ہوئی جب ان افراد کی گاڑیوں کا انٹیلی جنس فورسز سے سامنا ہوا اور لڑائی شروع ہو گئی۔ مختصر جھڑپ کے نتیجے میں شمالی زون کا مسئول خود اور اس کے دو دیگر ساتھی مارے گئے، جبکہ اس گروہ کے چند دیگر ارکان کو زندہ گرفتار کر لیا گیا۔

سکیورٹی فورسز نے حملہ آوروں سے دو کرولا کاریں، ایک کلاشنکوف اور دو پستول بھی برآمد کیے ہیں۔

یہ گروہ صوبہ بلخ میں دستی بموں اور ہلکے ہتھیاروں کے ذریعے کئی حملوں میں بھی ملوث تھا اور اب یہ بلخ کے گورنر پر حملہ کرنے کا منصوبہ بنا رہا تھا، لیکن اسے اپنے ہدف تک پہنچنے سے قبل ہی ختم کر دیا گیا۔

سکیورٹی فورسز کے مطابق ہلاک ہونے والے تینوں افراد حال ہی میں تاجکستان اور بھارت سے واپس آئے تھے اور انہوں نے امارت کے مسئولین اور اہداف پر حملوں کے لیے پچاس ہزار امریکی ڈالر بھی وصول کیے تھے۔